خاموش فریاد

کبھی آپ نے کسی یتیم ویسیر بچے کی زندگی دیکھی ہے؟ کس طرح جب اسکے سرسے اسکے والدین کا سایہ اٹھ جاتا ہے تواسکے قریبی رشتے دار تک اسکی بوٹیاں نوچنے کے درپے ہوجاتے ہیں ، بے دام غلام ، غصہ اتارنے کے لئیے پنچنگ بیگ، اپنی ہربرائی کاذمہ دار اس یتیم بچے کوبنا دیا جاتا ہے کبھی طنز تشنوں سے اسکا کلیجہ چھلنی کیا جاتا ہے توکبھی ڈنڈے یا جلتی سلاخ سے اسکے جسم کوداغدارکیا جاتا ہے اور وہ بچہ بے بسی کی تصویر بنا رہتا ہے کیونکہ اسکے پاس کوئی جگہ نہیں ہوتی جہاں وہ جاکرچھپ جائے کوئی اسکا اپنا نہیں ہوتا جواسکو ان سب مظالم سے بچا لے ۔۔ یہی مثال کچھ ہمارے وطن کی ہے، پچھلے 67 سال سے ایک یتیم بچے کیطرح باطنی وظاہری مظالم سہہ رہا ہے اسکے اپنے اسکی بوٹیاں نوچ نوچ کرکھا رہے ہیں اسکی عزت کوغیروں میں سرعام ننگا کرکے بولی لگا رہے ہیں سب کو دعوت ِ عام ہے کہ آئے اوراسکے ساتھ جوگھناؤنا کھیل کھیلنا ہے کھیلے ہم سب تماشائی بنے دیکھیں گے۔ اسکے جسم پر بڑے بڑے چرکے لگائے گئے ہیں اورمزید لگائے جارہے ہیں ، کچھ ہی دن پہلے اسکے دل پرایک کاری چرکہ لگایا گیا ہےپڑوسیوں کے بچوں نے  مگر اسکے اپنے صرف اتنا مرہم رکھ سکے کہ مرنا جائے کہ ہم مزید تونوچ لیں کیا پتا کچھ اور بھی اسکے پاس بچا ہوا ہو ۔۔ بہت تکلیف میں ہے اسکو دکھ یہ ہے کہ آج وار اسکے دل پرہوا ہے مگرکوئی اسکے دکھ وتکلیف کا مداوا کرنے والا نہیں، سب اپنے اپنے میں مصروف ہیں زندگی رواں دواں ہے اسکا کوئی انسانیت کے ناطےسے بھی پرسان حال نہیں۔۔۔۔ کیا کوئی ہے جو اس یتیم بلکتے سسکتے ملک کو سینے سے لگا سکے ؟ کوئی ہے جو اس معصوم ملک کے دکھوں کا مداوا کرے؟ کوئی ہے جو اس ملک کواپنا سگا سمجھ سکے؟ کوئی ہے جو کہہ سکے کہ یہ ملک میرا ہے اور اسکو سنبھالنا میری ذمہ داری ہے؟ کوئی ہے؟

ایس-گل

 

Advertisements

About S.Gull

ایک عام انسان جو اس دنیا کے پل پل بدلتے رنگوںکو دیکھتا اور محسوس کرتا ہے جو معاشرے میں آہستہ آہستہ سرایت کرتے مادیت پرستی اورانسانیت کی تڑپتی سِسکتی موت کا تماش بہین ہے۔ جو اگرچہ کے خود بھی اس معاشرے کا ہی حصہ ہے مگرپھربھی چاہتا ہے کہ گھٹا ٹوپ اندھیرے میں تھوڑی سے روشنی مل جائے
This entry was posted in Uncategorized. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s